سعودی عرب میں سزائے موت ملنے سے چند لمحوں پہلے مجرم کو زندگی کی سب سے بڑی خوشخبر ی مل گئی

ریاض (میڈیا 92 نیوز آن لائن)
سعودی شہر تبوک کے قصاص میدان میں عوض العمرانی نامی شہری نے اپنے بیٹے کے قاتل کو موت کی سزا دئیے جانے سے چند لمحے قبل ہی معافی دے دی ۔

العربیہ نیوز کے مطابق سعودی شہری نے قاتل کو اللہ کی خاطر معاف کیا۔سزائے موت کے مجرم نے پانچ سال جیل میں گزارے تھے اور سزا کے فیصلے پر عمل درآمد کیا جانا تھا۔خوشی کی خبر سن کر مجرم نے سجدہ شکر ادا کیا۔ اس دوران اس کے رشتے داروں نے بھی نئی زندگی ملنے پر مبارک باد دی۔ عوض العمرانی نے معافی کا فیصلہ دیت کے بغیر کیا ہے۔

گورنر تبوک ریجن شہزادہ فھد بن سلطان نے بیٹے کے قاتل کو قصاص سے چند لمحے پہلے کسی خون بہا کے بغیر معاف کرنے والے شہری ’عوض العمرانی‘ کے جذبہ خیر کو سراہا ہے۔ انہوں نے عوض العمرانی سے خصوصی ملاقات کی جس میں انہوں نے نوجوان مقتول کے والد کے طور پر ان کے بڑے پن کو سراہا۔

یہ بھی پڑھیں

سپرماریو برادرز کا 35 سال پرانا نایاب گیم دس کروڑ روپے میں نیلام

(میڈیا92نیوز)شاید اسے ڈجیٹل ویڈیو گیم کی تاریخ میں سب سے مہنگا فروخت ہونے والا گیم …