کرکٹ کی تاریخ میں 109 برس بعد شاندارکارنامہ، ویسٹ انڈیز کے کھلاڑیوں نے تاریخ رقم کر دی

بلاوایو(میڈیا پاکستان) زمبابوے کے خلاف دوسرے اور آخری ٹیسٹ میچ میں ویسٹ انڈیز کے بیٹسمینوں نے نئی تاریخ رقم کر دی، تفصیلات کے مطابق ویسٹ انڈیز کے بلے باز شین ڈورچ اور جیسن ہولڈر نے زمبابوے کے خلاف آٹھویں وکٹ کی شراکت میں 212 رنز بنائے۔ دونوں بیٹسمینوں نے شاندار بیٹنگ کرتے ہوئے سنچریاں سکور کیں، ویسٹ انڈیز کی ٹیم زمبابوے کے پہلی اننگز کے سکور 326 کے جواب میں 230 رنز پر سات کھلاڑی آؤٹ کرا کر مشکلات میں گھری ہوئی تھی کہ اس دوران ویسٹ انڈیز کے کپتان جیسن ہولڈر اور شین ڈورچ نے اننگز کو سنبھالا دیا ، اور دونوں نے آٹھویں وکٹ کی شراکتمیں 212 رنز بنائے، جیسن ہولڈر نے 110 رنز بنائے جبکہ ڈورچ نے 103 رنز بنائے، واضح رہے کہ یہ کرکٹ کی تاریخ میں 109 سال بعد پہلا موقع ہے کہ آٹھویں اور نویں نمبر پر بیٹنگ کے لیے آنے والے دونوں کھلاڑیوں نے ایک ہی اننگز میں سنچریاں بنائیں ، اس سے قبل کرکٹ کی تاریخ میں ایسا ایک بار ہوا ہے جب 1908 میں آسٹریلیا کے بلے باز گلیم بل اور راجر ہارٹیگن نے آٹھویں اور نویں نمبرز پر کھیلتے ہوئے انگلینڈ کے خلاف سنچریاں سکور کی تھیں۔ اس طرح ویسٹ انڈیز کے ان دونوں کھلاڑیوں نے کرکٹ کی تاریخ میں 109 سال بعد اپنی شاندار کارکردگی کے بدولت تاریخ رقم کر دی ہے۔

یہ بھی پڑھیں

ریٹائر نہیں ہورہا عمر کے بجائے کارکردگی دیکھنی چاہیے، شعیب ملک

قومی کرکٹ ٹیم کے آل راؤنڈر شعیب ملک نے کہا ہے کہ عمر کے بجائے …