ڈسٹرکٹ ایجوکیشن اتھارٹیز آپریشنل کرنے کیلئے30ستمبر کی ڈیڈ لائن مقرر

لاہور(میڈیا پاکستان) پنجاب میں ڈسٹرکٹ ایجوکیشن اتھارٹیز آپریشنل کرنے کیلئے30ستمبر کی ڈیڈ لائن مقرر کردی گئی ہے۔ ڈسٹرکٹ ایجوکیشن اتھارٹیز چیئرمین ، وائس چیئرمین، سی ای اوز، ٹیکنو کریٹس اور عوامی نمائندگان پرمشتمل ہونگی۔ اس میں ٹیکنو کریٹس اورعوامی نمائندگان کی تعداد آبادی کے تناسب سے ہوگی۔ چیئرمین، وائس چیئرمین کے نام سکروٹنی کے بعد منظوری کیلئے وزیراعلیٰ پنجاب کو ارسال کردئیے گئے ہیں۔ وزیراعلیٰ پنجاب کی منظوری کے بعد صوبے کے تمام اضلاع میں ڈی اے ایز آپریشنل ہوجائیں گی جبکہ ٹیکنو کرپشن کے نام سکولز ایجوکیشن ڈیپارٹمنٹ نے فائنل کرلئے ہیں۔ذرائع کے مطابق اس حوالے سے محکمہ سکولز ایجوکیشن ڈیپارٹمنٹ پنجاب کو مجموعی طور پر2460درخواستیں ملی ہیں جن میں سے116درخواستیں آن لائن اور1300درخواستیں بذریعہ ڈاک موصول ہوئیں۔ذرائع کا کہنا ہے کہ سی ای اوز ایجوکیشن کی تعیناتی کیلئے16پی ایم ایس،2ڈی ایم جی،3ان لینڈ سروس، 17آرمی افسران،25بنکرز،34فرمزو کارپوریٹ آفیسرز سمیت1240ماہرین تعلیم کو انٹرویوز کیلئے فائنل کیا گیا ہے۔نئے بلدیاتی سسٹم کے تحت ڈسٹرکٹ ایجوکیشن اتھارٹی میں چیف ایگزیکٹو آفیسرز(سی ای اوز) ایجوکیشن کی تنخواہ ایم پی ون سکیل کے برائر رکھی گئی ہے جو تقریباً7لاکھ روپے ماہانہ تک ہے۔ علاوہ ازیں ان کیلئے نئی گاڑیاں اور نئے دفاتر بھی قائم کئے جائینگے۔

یہ بھی پڑھیں

ماسٹر پلان عامر احمد خان

میڈیا 92 نیوز ڈسک ماسٹر پلان2050ءلاہور ڈویژن کے روشن مستقبل کا تعین کرے گا ۔ …