خواجہ سراؤں کو شناختی کارڈ بنوانے کا قانونی حق مل گیا

لاہور(میڈیا پاکستان) خواجہ سراؤں (Eunuchs) کی کوششیں رنگ لے آئیں، لاہور ہائیکورٹ نے شناختی کارڈ بنانے کا قانونی حق دے دیا۔
تفصیلات کے مطابق لاہور ہائیکورٹ کے جسٹس عابد عزیز شیخ نے ناروال کی میاں آسیہ خواجہ سرا کی درخواست پر فیصلہ سناتے ہوئے خواجہ سرائوں کو شناختی کارڈ بنانے کا قانونی حق دے دیا، خواجہ سرا شناختی کارڈ پر اپنے باپ کی جگہ گرو کا نام لکھوائیں گےجبکہ گرو اپنے چیلوں کے نام نادرا میں درج کروانے کا پابند ہوگا۔
دوسری جانب خواجہ سراؤں کو شناختی کارڈ جاری کرنے کے حوالے سے نادرا نے بھی پالیسی لاہور ہائیکورٹ میں پیش کر دی ہے جس کے مطابق خواجہ سراؤں کو شناختی کارڈ جاری کیے جائیں گے۔

یہ بھی پڑھیں

پاکستان اور نیوزی لینڈ کے درمیان پہلا ٹیسٹ ڈرا ہوگیا

 کراچی: پاکستان اور نیوزی لینڈ کے درمیان دو میچوں پر مشتمل سیریز کا پہلا ٹیسٹ میچ …