ملک بھر میں پٹرول کی شدید قلت کا خدشہ، عوام کیلئے پریشان کن خبر آگئی

(میڈیا پاکستان) لاہور سمیت ملک بھر میں پٹرول کی شدید قلت کا خدشہ پیدا ہوگا، ملک میں صرف 6 روز کیلئے پٹرول کا ذخیرہ باقی رہ گیا، پٹرول کی قلت کے باعث شہری خوار اور گاڑیاں بند ہونے لگیں، پٹرولیم ڈیلرز ایسوسی ایشن نے ممکنہ بحران کی ذمہ داری وزارت پٹرولیم اور اوگرا پر بھی ڈال دی۔پٹرول بحران ایک بار پھر سر اٹھانے لگا، شہر کے کئی پٹرول پمپس میں پٹرول نایاب ہو گیا اور اگر کہیں مل بھی رہا ہے تو وہاں شہریوں کی لمبی قطاریں لگی نظر آتی ہیں، پٹرول بحران کے پیش نظر شہری بھی خدشات کا اظہار کرتے ہوئے کہتے ہیں کہ حکومت مسئلے کو سنجیدگی سے حل کرے۔
پٹرول پمپس مالکان کا کہنا ہے کہ سپلائی پوری نہ ملنے سے قلت پیدا ہوئی، پٹرول ڈیلرز ایسوسی ایشن کے جنرل سیکرٹری خواجہ عاطف کا کہنا ہے کہ ملک میں صرف چھ روز کیلئے پٹرول کا ذخیرہ باقی رہ گیا جبکہ قانون کے مطابق ملک میں بیس روز کا ذخیرہ ہونا ضروری ہے، ان کا کہنا تھا کہ لاہور میں طلب کے برعکس 30 سے 40 فیصد پٹرول فراہم کیا جارہا ہے.پٹرولیم ڈیلرز ایسوسی ایشن کے جنرل سیکرٹری کا کہنا تھا کہ پی ایس او سمیت دیگر کمپنیوں نے پٹرول خریداری کے آرڈر میں تاخیر کی جبکہ شیل کمپنی نے لاجسٹک کپیسٹی کم کر دی ہے، خواجہ عاطف کا کہنا ہے کہ حکومتی اداروں کا کام سپلائی کی مانیٹرنگ کرنا ہے جسے نظر انداز کیا گیا۔

یہ بھی پڑھیں

پاکستان اور نیوزی لینڈ کے درمیان پہلا ٹیسٹ ڈرا ہوگیا

 کراچی: پاکستان اور نیوزی لینڈ کے درمیان دو میچوں پر مشتمل سیریز کا پہلا ٹیسٹ میچ …