پانچ سال سے پرانی رجسٹری کے انتقال کی تصدیق کلکٹر سے اجازت کے ساتھ مشروط

لاہور(میڈیا پاکستان) پانچ سال سے پرانی رجسٹری کے انتقال کی تصدیق کلکٹر سے اجازت کے ساتھ مشروط، تحصیل ماڈل ٹاؤن کی خاتون اسسٹنٹ ڈائریکٹر لینڈ ریکارڈ نے سینئر ممبر بورڈ آف ریونیو پنجاب کے احکامات ہوا میں اڑادئیے۔ ریونیو ماہرین سمیت وکلاء نے پریکٹس کو غیرقانونی قراردے دیا۔ عدالت عالیہ میں جائیں گے وکلاء نوٹس لیا جائے گا ، ترجمان بورڈ آف ریونیو۔ مزید معلوم ہوا ہے کہ پنجاب لینڈ ریکارڈ اتھارٹی کے قائم کردہ اراضی ریکارڈ سنٹرز تحصیل ماڈل ٹاؤن کی اسسٹنٹ ڈائریکٹر لینڈ ریکارڈ کے خلاف ضابطہ احکامات عوام کیلئے سردرد اور رشوت وصولی کا سبب بننے لگے اراضی ریکارڈ سنٹر میں پانچ سال سے پرانی رجسٹری کے انتقال کی تصدیق ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر کی تحریری اجازت سے مشروط کردی گئی مزید معلوم ہوا ہے کہ موضع کوٹ نبی بخش والا کی رجسٹری ودستاویز نمبری 4040جلد نمبر5871بہی نمبر1مورخہ29-3-2000 کی انتقال کروانے کیلئے آنے والے سائل لیاقت علی ولد مسکین علی دربدرکی ٹھوکریں کھانے پرمجبور ہوچکا ہے اور15-3-17کو مارک کروائی جانے والی درخواست کے بعد عملہ سب رجسٹرار آفس نشتر ٹاؤن کی جانب سے مصدقہ نقل کی تصدیق کروانے کے بعد تاحال رجسٹری کا انتقال تصدیق نہیں کی جاسکی ہے اس تاخیر کے دوران یہ بھی معلوم ہوا ہے کہ ایس ای او زبیر بٹ نے اس کام کے عوض20ہزار روپے رشوت وصولی بھی کی ہے اور الزام ثابت ہونے پر محکمانہ کارروائی کرتے ہوئے ایس ای او زبیر بٹ کو معطل بھی کردیا گیا ہے۔ ذرائع نے مزید آگاہی دی ہے کہ اسسٹنٹ ڈائریکٹر لینڈ ریکارڈ تحصیل ماڈل ٹاؤن نے سائل کو مزید پٹواری ، قانگو، ریونیو آفیسر کی رپورٹ کروانے کے بعد ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر سے تحریری اجازت لیکر آنے کے احکامات بھی جاری کردئیے۔ مذکورہ اسسٹنٹ ڈائریکٹر لینڈ ریکارڈ ارم شہزادی نے اس ضمن میں موقف اختیار کیا ہے کہ پانچ سال سے پرانی رجسٹری کی ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر ریونیو سے اجازت لازم ہے اس سے ہمارا کیئرئیر محفوظ ہوجاتا ہے اور اجازت ملنے سے انتقال کی تصدیق میں بھی آسانی ہوجاتی ہے دوسری جانب ریونیوماہرین کا کہنا ہے کہ سینئرممبر بورڈآف ریونیوپنجاب کے تحریری احکامات اور فیصلے کی موجودگی کے بعد یہ اقدام انتہائی غیرقانونی اور خلاف ضابطہ ہے۔ جس کا فوری نوٹس لیا جانا چاہیے سینئر ایڈووکیٹ لاہورہائیکورٹ یوسف خان کاکڑ اور گلفام علی بھنڈر نے اس حوالے سے کہا کہ اے ڈی ایل آر کی اس پریکٹس کو لاہورہائیکور ٹ میں چیلنج کریں گے جبکہ بورڈ آف ریونیو پنجاب کے ترجمان کا کہنا ہے اس غیرقانونی اقدام اور پریکٹس کا نوٹس لیا جائے گا۔

یہ بھی پڑھیں

پاکستان اور نیوزی لینڈ کے درمیان پہلا ٹیسٹ ڈرا ہوگیا

 کراچی: پاکستان اور نیوزی لینڈ کے درمیان دو میچوں پر مشتمل سیریز کا پہلا ٹیسٹ میچ …