پاکستان کی امریکہ سے متعلق خارجہ پالیسی میں بڑی تبدیلی

اسلام آباد(میڈیا پاکستان )پاکستان نے امریکہ سے سفارتی تعلقات کی سطح بدلنے کا فیصلہ کر لیا(pak us foreign policy) ، اب کوئی بھی امریکی عہدیدار پاکستان کا دورہ باہمی مشاورت سے طے کردہ شیڈول کے بغیر نہیں کر سکے گا۔
تفصیلات کے مطابق پاکستان نے امریکہ سے سفارتی تعلقات کی سطح بدلنے کا فیصلہ کر لیا ، ذرائع کے مطابق اب پاکستان امریکہ کے ساتھ معاملات پرانے گہرے اور دوستانہ تعلقات کی بنیاد پر طے نہیں کریگا۔
اب کوئی بھی امریکی عہدے دار پاکستان کا دورہ باہمی مشاورت سے طے کردہ شیڈول کے بغیر نہیں کر سکے گا ، پاکستان کی امریکہ سے متعلق خارجہ پالیسی میں بڑی تبدیلی رونما ہوئی ہے۔۔
ذرائع کے مطابق پاکستان نے امریکہ سے سفارتی تعلقات کی سطح بدلنے کا فیصلہ کرلیا ، اب پاکستان امریکہ کے ساتھ معاملات پرانے گہرے اور دوستانہ تعلقات کی بنیاد پر طے نہیں کریگا۔
اب پاکستان کے امریکہ کے ساتھ سفارتی تعلقات اسٹریجٹک اور اتحادی ملک کے نہیں ہونگے ، اب کوئی بھی امریکی عہدیدار پاکستان کا دورہ باہمی مشاورت سے طے کردہ شیڈول کے بغیر نہیں کر سکے گا۔
ذرائع کے مطابق پاکستان نے موقف اپنایا ہے کہ کسی بھی امریکی عہدے دار کو بغیر اجازت لئے دورہ کرنے پر خوش آمدید نہیں کہا جائے گا ، امریکہ کے ساتھ تعلقات معمول کے مطابق نہیں رہے۔
یہ فیصلہ ٹرمپ انتظامیہ کی جانب سے اس بیان پر کیا گیا کہ پاکستان کے ساتھ اب تعلقات کا سلسلہ معمول کے مطابق نہیں رہا ، اسی وجہ سے پاکستان کی جانب سے امریکی نائب وزیر خارجہ کا دورہ ملتوی کروایا گیا۔

یہ بھی پڑھیں

پاکستان اور نیوزی لینڈ کے درمیان پہلا ٹیسٹ ڈرا ہوگیا

 کراچی: پاکستان اور نیوزی لینڈ کے درمیان دو میچوں پر مشتمل سیریز کا پہلا ٹیسٹ میچ …