شہباز شریف نےانتخابی منشور پیش کردیا

لاہور:(میڈیا92نیوز) شہباز شریف نےانتخابی منشور پیش کردیا
مسلم لیگ (ن) کے صدر میاں شہباز شریف نے انتخابی منشور پیش کرتے ہوئے کہا ہے کہ ملک کی ترقی کے 66 سال ایک طرف اور پانچ سال ایک طرف ہیں، بڑے دعوے کرنے والوں نے اپنے صوبوں میں کچھ نہیں کیا۔
پنی پارٹی کا انتخابی منشور پیش کرتے ہوئے شہباز شریف نے کہا کہ جب ہماری حکومت آئی، ملک بہت سے مسائل میں گھرا ہوا تھا۔ 2013ء میں لوڈشیڈنگ کی وجہ سے سارا ملک سراپا احتجاج تھا، بے روزگاری عام اور ملکی معیشت تباہ ہو چکی تھی، واپڈا کے دفاتر جلائے جاتے تھے، لیکن نواز شریف نے اقتدار سنبھالتے ہوئے جو وعدے کیے انھیں پورا کیا، اس کے بعد شاہد خاقان عباسی نے ان کے ایجنڈے کو آگے بڑھایا۔انہوں نے کہا کہ لیگی دورِ حکومت میں ملکی تاریخ میں پہلی بار توانائی کے منصوبے لگائے گئے، 11 ہزار میگاواٹ بجلی نیشنل گرڈ، 3 ہزار میگاواٹ بجلی سی پیک کے ذریعے اور 5 ہزار میگاواٹ بجلی این ایل جی سے سسٹم میں شامل کی، تاریخ میں پہلی مرتبہ شسمی توانائی کے منصوبے لگائے گئے، نیلم جہلم منصوبے کو قابلِ عمل بنایا گیا اور ان تمام منصوبوں کو شفاف طریقے سے لگایا گیا۔ انہوں نے بتایا کہ خود روزگار سکیم کے ذریعے 20 لاکھ
افراد کو روزگار ملا لیکن جنہوں نے بڑے بڑے دعوے کیے انہوں نے اپنے صوبوں میں کچھ نہیں کیا۔
شہباز شریف اس موقع پر نیب سے شکوے شکایتیں بھی کرتے رہے اور کہا کہ نیب کا سورج آج کل بہت چمک رہا ہے، انہیں تو صاف پانی کمپنی کیس میں بلا لیا گیا لیکن بابر اعوان جنہوں نے نندی پور منصوبے میں اربوں کھائے وہ نیب کو نظر نہیں آتے۔

یہ بھی پڑھیں

عام انٹرنیٹ سے 45 لاکھ گُنا تیز انٹرنیٹ

برمنگھم: سائنس دانوں نے انٹرنیٹ اسپیڈ کا نیا ورلڈ ریکارڈ قائم کیا ہے جو موجودہ براڈ …