اینٹی کرپشن میں پانچ سال سے زائد عرصہ سے تعینات پولیس اہلکاروں کی واپسی

(میڈیا پاکستان) اینٹی کرپشن میں پانچ سال سے زائدعرصہ سے تعینات پولیس اہلکاروں کو واپس پولیس میں بھیجنے کا فیصلہ، ابتدائی مرحلے میں لاہور ریجن سمیت صوبہ بھر میں انٹی کرپشن کے دفاتر میں تعینات ایک سو چھتیس پولیس اہلکاروں کو واپس بھیجا جائے گا۔

ذرائع کے مطابق لاہور ریجن سمیت صوبہ بھر میں انٹی کرپشن کے دفاتر میں تعینات ایک سو چھتیس اے ایس آئی ،ہیڈ کانسٹیبلزاور کانسٹیبلز کو واپس پولیس میں بھیجنے کیلئے فہرستیں مرتب کرلی گئیں۔

اینٹی کرپشن حکام کے مطابق ابتدائی مرحلہ میں پانچ سال سے زائد عرصہ سے انٹی کرپشن میں تعینات پولیس اہلکاروں کی خدمات واپس کی جارہی ہیں۔انٹی کرپشن لاہور ریجن میں تعینات اے ایس آئی ذوالفقارعلی گزشتہ آٹھ سال سے انٹی کرپشن میں تعینات ہے۔

ہیڈکانسٹیبل فدا حسین نو سال، کانسٹیبل محمد اویس نوسال، کانسٹیبل شعیب علی آٹھ سال سے انٹی کرپشن لاہور ریجن میں تعینات ہے۔ اسی طرح کانسٹیبل حسنین ساڑھے آٹھ سال جبکہ شہباز حسین آٹھ سال سے انٹی کرپشن میں تعینات ہے۔ایڈیشنل ڈی جی انٹی کرپشن ندیم سرور نے آئی جی آفس کو پانچ سال سےزائد عرصہ سےانٹی کرپشن میں تعینات پولیس اہلکاروں کی فہرست مہیا کردی ہے۔

انٹی کرپشن حکام کا کہنا ہےکہ انٹی کرپشن میں تعیناتی کیلئے پولیس سے اچھی شہرت رکھنے والے نئے اہلکار مانگ لئے گئے ہیں۔

یہ بھی پڑھیں

پاکستان اور نیوزی لینڈ کے درمیان پہلا ٹیسٹ ڈرا ہوگیا

 کراچی: پاکستان اور نیوزی لینڈ کے درمیان دو میچوں پر مشتمل سیریز کا پہلا ٹیسٹ میچ …