لاہور ہائیکورٹ نے  ڈی جی انٹی بریگیڈ یئر ریٹائرڈ مناظر علی رانجھا کے تقرر کیخلاف درخواست

(میڈیا 92 نیوز)  لاہور ہائیکورٹ نے  ڈی جی انٹی بریگیڈیئر ریٹائرڈ مناظر علی رانجھا کے تقرر کیخلاف درخواست ناقابل سماعت ہونے کی بنیاد پر  مسترد کر دی تفصیلات کے مطابق لاہور ہائیکورٹ کے جسٹس فرخ عرفان خان نے مقامی وکیل  محمد حیات کلاسن  کی درخواست پر سماعت کی جس میں ڈی اینٹی کرپشن کے عہدے پر مناظر علی رانجھا کے تقرر جو چیلنج کیا گیا. درخواست گزار وکیل نے نشاندہی کی کہ ڈی جی انٹی کرپشن مناظر علی رانجھا ریٹائر فوجی افسر ہیں اور سروس رولز کے مطابق کسی بھی شخص کو دوبارہ تعینات نہیں کیا جاسکتا، درخواست گزار  نے قانونی نکتہ اٹھایا کہ سروس رولز کے مطابق آہم عہدے پر کنٹریکٹ پر تعیناتی نہیں کی جاسکتی، درخواست گزار نے الزام لگایا کہ پنجاب حکومت نے اپنے کرپٹ افسران کو بچانے کیلئے من پسند تعیناتی کی، درخواست گزار نے استدعا کی کہ  پنجاب حکومت کا تعیناتی کا نوٹیفکیشن کالعدم قرار دیا جائے.  

یہ بھی پڑھیں

محکمہ ٹرانسپورٹ پنجاب کا روڈا اور سی بی ڈی پنجاب میں سفری سہولیات کے لئے نئے نظام کی تشکیل کا فیصلہ

محکمہ ٹرانسپورٹ پنجاب نے عصر حاضر کے تقاضوں کو مد نظر رکھتے ہوئے روڈا اور …