لاہور ہائیکورٹ نے پی آئی اے کا طیارہ  جرمنی کو سستے داموں فروخت کرنے کیخلاف درخواست

(میڈیا 92 نیوز) لاہور ہائیکورٹ نے پی آئی اے کا طیارہ  جرمنی کو سستے داموں  فروخت کرنے کیخلاف درخواست پر وفاقی حکومت کو ہدایت کی ہے کہ عدالت اس بارے میں آگاہ کیا جائے کہ کیا اسی نوعیت کا معاملہ سپریم کورٹ میں تو زیر سماعت نہیں ہے. تفصیلات کے مطابق لاہور ہائیکورٹ کے  جسٹس شجاعت علی خان نے نبیل  کاہلوں ایڈوکیٹ کی درخواست پر سماعت کی جس میں پی آئی اے کے طیارے کی سستے داموں فروخت کو چیلنج کیا گیا.. سماعت کے دوران  عدالت نے درخواست گزار وکیل سے استفسار کیا  کیا یہ معاملہ سپریم کورٹ میں زیر سماعت ہے جس پر درخواست گزار وکیل نے دعوی کیا کہ  سپریم کورٹ میں نجکاری کا معاملہ زیر سماعت ہے اس معاملہ پر کوئی درخواست زیر سماعت نہیں ہے. ہائیکورٹ نے وفاقی حکومت کے وکیل کو ہدایت کی کہ اس بارے میں عدالت کو آگاہ کیا جائے کہ اسی معاملے پر کوئی سماعت زیر سماعت یا نہیں. درخواست گزار  کے مطابق قومی ائیرلائن کے سابق سی ای او ہلڈن برانڈ نے ائیربس  310 اے سستے داموں فروخت کر دیا گیا. درخواست گزار نے استدعا کی کہ طیارہ فروخت کرنے کا اقدام کالعدم قرار دیا جائے اور  سابق سی ای او کی گرفتاری کے لیے ریڈ وارنٹ جاری کیے جائیں. درخواست پر مزید کارروائی  11 مئی کو ہوگی.

یہ بھی پڑھیں

عام انٹرنیٹ سے 45 لاکھ گُنا تیز انٹرنیٹ

برمنگھم: سائنس دانوں نے انٹرنیٹ اسپیڈ کا نیا ورلڈ ریکارڈ قائم کیا ہے جو موجودہ براڈ …