کم عمر بچی کی شادی ویمن پولیس نے ناکام بنادی

عمرکوٹ (مانیٹرنگ ڈیسک/میڈیا92نیوز) عمرکوٹ ضلع کے گاوں ہاشم پلی میں شادی تقریب پر ویمن پولیس عمرکوٹ نے چھاپہ مار کر بارہ سالہ کم عمر بچی کی شادی کی کوشش ناکام بنادی اور تین خواتین سمیت پانچ افراد کو گرفتار کر لیا۔ گرفتار ہونے والوں میں بارہ سالہ دلہن امیشا سولنگی کے بھائی اور ماں بھی شامل ہے

جبکہ عمرکوٹ پولیس دلہن امیشا کو بھی تھانے لے آئی ، یہ چھاپہ خفیہ اطلاع پر مارا گیا جہاں کم عمر لڑکی کی شادی تقریب جاری تھی. ایس ایچ او ویمن تھانہ خوشبخت اعوا ن نے بتایاکہ چھاپے کے دوران وہاں موجود لوگوں نے پولیس سے بدسلوکی کی اور ہاتھ بھی اٹھایا جبکہ موقع سے فائدہ اٹھا کر دولہا اور نکاح خواں ہوگئے۔ لڑکی کی ماں نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے بتایاکہ لڑکی کی شادی نہیں منگنی ہو رہی تھی۔ایس ایچ او خوش بخت اعوان نے کہا کہ ھم نے اطلاع ملنے پر کارروائی کی جب ہم پہنچے تو وہاں شادی کی تیاریاں تھی، بعد میں انہوں نے یہ رنگ دیا کہ لڑکی کے بھائی کی شادی تھی، اس کی تو صرف منگنی تھی، فرار ہونے والے دولہا کی عمر بھی 13،14 سال تھی، ہم دلہن کو لے آئے ہیں، قانون کے مطابق اپنی ڈیوٹی کی اور مزید تحقیقات جاری ہیں۔

یہ بھی پڑھیں

امریکا اسرائیل کو 2 ہزار پونڈ وزنی بم سمیت دیگراسلحہ فراہم کرے گا

 واشنگٹن: امریکا نے اسرائیل کو اربوں ڈالر کے بم اور لڑاکا طیارے بھیجنے کی منظوری دے …