میڈیا ہاؤسز نے مالی فائدے کیلئے سیاستدانوں کو لڑایا‘خورشید شاہ

اسلام آباد: پاکستان پیپلز پارٹی (پی پی پی) کے رہنما اور قومی اسمبلی میں اپوزیشن رہنما خورشید شاہ نے الزام عائد کیا ہے کہ ملک کے بڑے میڈیا ہاؤسز مالی فائدے کے لیے سیاست دانوں لڑاتے ہیں جبکہ ملک کو درپیش اصل مسائل پر بات نہیں کی جاتی۔
انہوں نے کہا کہ حیدرآباد، سکھر، مٹھی میں ترقیاتی کاموں کی ویڈیو میڈیا ہاؤسز نشر نہیں کرتے کیونکہ ایسا کرنے سے وہ سمجھتے ہیں کہ پیپلز پارٹی کا امیج بہترہوگا۔اپوزیشن لیڈر کا کہنا تھا پیپلز پارٹی نے گالم گلوچ کی سیاست کبھی نہیں کی اور نہ ہی ذاتی طور پر حملے کیے جبکہ آج جومسائل ہیں اس پر بات کرنےکیلئے کوئی تیار نہیں ہے۔
انہوں نے بتایا کہ آج سیاستدانوں کی تقاریرمیں گالیوں کے سوا کچھ نہیں تاہم ہم اپنے بچوں کو کون سی سیاست سکھائیں گے۔
صحافیوں سے بات چیت کرتے ہوئے انہوں نے واضح کیا کہ اسلام آباد میں عارضہ قلب کے اسپتال میں مریضوں کو ڈاکٹر سے ملاقات کے لیے 6 ماہ انتظار کرنا پڑتا ہے لیکن سکھر میں 36 گھنٹے کے اندر اسٹنڈ ڈال کر مریض کو روانہ کردیا جاتا ہے۔
انہوں نے حکمراں جماعت مسلم لیگ (ن) پر کڑی تنقید کرتے ہوئے سوال ا ٹھا یا کہ حکومت نے اپنے مینوفیسٹو کے مطابق لوگوں کے سماجی، معاشی اور اقتصادی مسائل دور کیے۔خورشید شاہ نے کہا کہ حکمراں جماعت جواب دے کہ ’این ایف سی ایوارڈ ہو ا یا نہیں، صوبائی خودمختاری ملے گی یا نہیں، وفاق کے زیر انتظام علاقے (فاٹا) کو خیبر پختونخوا میں ضم کرنے کا وعدہ پورا کیا یا نہیں، گلگت بلتستان سے کیا گیا وعدہ پورا ہوا یا نہیں، ڈھائی لاکھ لوگوں کو مسقتل کرنے کا وعدہ پورا ہوا یا نہیں‘
انہوں نے کہا کہ حکومت بتایا کے 2013 سے 2018 تک کتنے کارنامے سرانجام دیئے جو عام شہریوں کی زندگی کے لیے تبدیلی کا باعث بنے ہوں۔

یہ بھی پڑھیں

ملائکہ اروڑا کا سابق شوہر ارباز خان کیساتھ فیملی ڈنر، ویڈیو وائرل

ممبئی: بالی ووڈ اداکارہ و ماڈل ملائکہ اروڑا نے اپنے سابق شوہر ارباز خان اور اُن کی …