سندھ ہائیکورٹ نے گٹکے کی فروخت پر پابندی برقرار

کراچی(بیورو رپورٹ/میڈیا 92نیوز)سندھ ہائیکورٹ نے گٹکے کی فروخت پر پابندی برقرار رکھتے ہوئے ہر تین ماہ میں عمل درآمد رپورٹ طلب کرلی۔

سندھ ہائیکورٹ میں گٹکے کی فروخت سے متعلق کیس کی سماعت ہوئی، کشمنرکراچی عدالت میں پیش ہوئے۔

درخواست میں موقف اختیارکیا گیا ہےکہ کھلے عام گٹکا فروخت ہورہا ہے جس سے کینسر اور کئی خطرناک بیماریاں پھیل رہی ہیں۔

اس موقع پر کمشنر کراچی نے عدالت کو بتایا کہ گٹکا فروخت کرنے والوں کے خلاف کارروائی کی گئی، جس کے دوران 500 سے زائد ایف آئی آر درج کروائیں لیکن کیس قابل ضمانت ہونے پر ملزمان رہا ہوجاتے ہیں۔

عدالت نے گٹکے کی فروخت پر پابندی برقرار رکھتے ہوئے سماعت ملتوی کردی۔

یہ بھی پڑھیں

عام انٹرنیٹ سے 45 لاکھ گُنا تیز انٹرنیٹ

برمنگھم: سائنس دانوں نے انٹرنیٹ اسپیڈ کا نیا ورلڈ ریکارڈ قائم کیا ہے جو موجودہ براڈ …