ہمیں اداروں کو مضبوط بنانے کیلئے کام کرنا چاہئے، چیف جسٹس منصور

بہاولپور (میڈیا پاکستان)چیف جسٹس لاہور ہائیکورٹ جسٹس منصور علی شاہ نے کہا ہے کہ مشکل سے مشکل معاملات عدالت میں طے پاتے ہیںجس کےلئے ہمیں اداروں کو مضبوط بنانا اور آگے لے کر جانا ہے اور میں ادارے کو مضبوط کرنے کیلئے اپنا حصہ ڈال رہا ہوں ،بہاولپور میں تقریب سے خطاب کرتے ہوئے منصور علی شاہ کا کہنا تھاہمیں لوگوںکیلئے مثال بننا چاہئے اس کے لئے وکیل کو احترام کے دائرے میں رہ کر صرف دلیل پیش کرنی چاہئے جبکہ جج صاحبان کوبھی اخلاق کے دائرے میں رہنا چاہئے اور وقار دکھانا چاہئے ،انہوں نے کہا میں خود ایک وکیل تھا محنت اور جستجو سے ترقی پا کر چیف جسٹس کے عہدے پر آگیا اور آنے والے دور میں آپ لوگ بھی اس عہدے پر فائز ہوں گے۔انہوں نے کہاآنے والے دور ٹیکنالوجی کا ہے جس کے استعمال سے سائلین کی مشکلات کم جا سکتی ہیں ،ہمیں عدالتوں میں زیر التوا 11 لاکھ مقدمات کے حل کیلئے نئی سوچ لانی ہے ، چیف جسٹس منصور علی شاہ نے کہا کہ اب مسائل حل کرنے کا فیصلہ کن وقت آگیا ہے اور اس کے لئے ہمیں پیشہ ورانہ طور پر ذمے داریاں اداکرنے کی ضرورت ہے۔

یہ بھی پڑھیں

پاکستان اور نیوزی لینڈ کے درمیان پہلا ٹیسٹ ڈرا ہوگیا

 کراچی: پاکستان اور نیوزی لینڈ کے درمیان دو میچوں پر مشتمل سیریز کا پہلا ٹیسٹ میچ …