کورٹ نے زیادتی کیس میں مسلم لیگی ن کے رہنما عدنان ثناءاللہ کو قصوروار قرار دیا

لاہور(عدالتی رپورٹر)سیشن کورٹ میں زیادتی کا شکار لڑکی نے اپنی شہادت قلمبند کرواتے ہوئے مسلم لیگی ن کے رہنما عدنان ثناءاللہ کو قصوروار قرار دیا۔عدالت نے کاروائی کرتے ہوئے فریقین کے وکلاءکو بحث کے لیے طلب کرلیا۔تفصیلات کے مطابق ایڈیشنل سیشن جج رحمت علی نے کیس کی سماعت کی۔عدالت کے روبرو متاثرہ لڑکی بینش نامی لڑکی نے اپنی شہادت قلمبند کروا دی۔اپنی شہادت میں لڑکی نے کہا کہ عدنان ثناءاللہ نے زیادتی اور تشدد کا نشانہ بنایا۔شریک دیگر دو ملزموں نے  مرکزی ملزم عدنان ثناء اللہ کی معاونت کی۔عدالت نے کاروائی کرتے ہوئے فریقین کے وکلاءکو بحث کے لیے طلب کرلیا اور کیس کی سماعت 4 مئی تک ملتویءکردی۔

یہ بھی پڑھیں

سارہ انعام قتل کیس میں شوہر شاہنواز کو سزائے موت کا حکم

اسلام آباد: کینیڈین شہری سارہ انعام قتل کیس میں ملزم شوہر شاہنواز امیر کو عدالت نے …