ریلوے کوچز میں سہولیات کا فقدان، ٹرینوں کے اپ گریڈ ہونےوالے بعض ریکس عملے کی مجرمانہ غفلت کی نذر ہوگئیں

لاہور(میڈیا92نیوز رپورٹ) وفاقی وزیر ریلوے خواجہ سعد رفیق کی ہدایت پر ڈیڑھ ارب روپے مالیت کی لاگت سے ٹرینوں کے اپ گریڈ ہونے والے بعض ریکس عملے کی مجرمانہ غفلت کی نذر ہوگئیں، مسافر کوچز میں مہیا کی گئی سہولیات ایک ایک کرکے فقدان کا شکار ہوگئیں، ریلوے کے شعبہ ویجی لینس سیلنے تصاویر کے ساتھ تفصیلی رپورٹ بناکر وفاقی وزیرریلوے کو ارسال کردی جس پر انہوں نے ایکشن لیتے ہوئے فوری طور پر ٹرینوں کی حالت زار بہتر بنانے کی ہدایت کردی۔ تفصیلات کے مطابق وفاقی وزیر ریلوے خواجہ سعد رفیق کی ہدایت عوام کو بہتر سفری سہولیات مہیا کرنے کےلئے مختلف ٹرینوں کے ریکس اپ گریڈ کئے گئے تھے جن پر ڈیڑھ ارب روپے لاگت آئی تھی، چند مہینوں بعد وزیر ریلوے کو ان سہولیات کے پڑتال کا خیال آیا تو انہوںنے محکمہ ویجی لینس کو سہولیات کی موجودہ صورتحال کا جائزہ لے کر رپورٹ پیش کرنے کا حکم دیا۔وزیر ریلوے کی ہدایت پر شعبہ ویجی لینس سیل نے مختلف اوقات میں اپ گریڈ ہونے والی ٹرینوں میں انسپکشن کی اور ایک ایک کوچز کو چیک کیا تو پتہ چلا کہ اپ گریڈ ہونے والی ٹرینوں کے واش روم اور صفائی کا نظام بہتر نہیں، بعض کوچز کے اندرلائٹ بھی درست نہیں تھی اورچند کوچز کے اندرپانی کی ٹینکیاں ٹپک رہی تھیں اور بعض کی تو سیٹیں بھی خراب تھیں۔

یہ بھی پڑھیں

حمزہ شہباز کی رہائی عثمان بزدار کے لئے خطرہ ،ڈاکٹر طارق فضل نے اندر کی بات بتادی

اسلام آباد (نیوز ڈیسک)مسلم لیگ (ن) کے مرکزی رہنما اور سابق وزیر مملکت ڈاکٹر طارق …