عیدالاضحی پر28ارب مالیت کے80لاکھ سے زائد جانور قربان کئے گئے

لاہور(میڈیاپاکستان) ملک بھر میں عیدالاضحی پر28ارب روپے مالیت کے80لاکھ سے زائد جانوروں کی قربانی کی گئیں،30لاکھ گائے اور بچھڑے،40لاکھ بکرے اور 10لاکھ سے زائد چھترے اور بھیڑیں ذبح کی گئیں۔ ان جانوروں کی کھالوں کی قیمت7ارب روپے سے زائد بنتی ہیں تاہم رواں برس کھالو ں کے نرخ گزشتہ برس کی نسبت 30فیصد کم رہے جس سے بیوپاری پریشان نہیں جبکہ خام چمڑے کے کاروبار سے وابستہ تاجرمن مانے نرخوں پر کھالیں خریدرہے ہیں۔ لاہور چمڑا منڈی میں بکرے کی کھالیں200سے 280روپے،چھترے کی کھال300سے 350، بچھڑے اور گائے کی کھال2100سے2700روپے اوراونٹ کی کھال صرف100سے150روپے میں فروخت ہوئی۔ ذرائع کے مطابق عالمی مارکیٹ میں چمڑے کی مانگ میں کمی کے باعث کھالوں کی قیمتیں گر گئیں ہیں۔ پاکستان ٹینریزایسوسی ایشن کے ذرائع نے ”میڈیا پاکستان“ کوبتایا کہ پاکستان میں کھالوں کو محفوظ کرنے میں محض گھنٹوں کی تاخیر سے بڑی تعداد میں کھالیں ضائع ہوجاتی ہیں ایک محتاط اندازے کے مطابق اس عیدالاضحی پر35فیصد کھالیں ضائع ہوجائینگی جن کی مالیت2ارب40کروڑ روپے ہے۔ کھالوں کے ضائع ہونے کی سب سے بڑی وجہ یہ ہے کہ اسے اتارنے کے ابتدائی گھنٹوں میں فوری نمک لگاکر محفوظ نہیں کیا جاتا۔

یہ بھی پڑھیں

ماسٹر پلان عامر احمد خان

میڈیا 92 نیوز ڈسک ماسٹر پلان2050ءلاہور ڈویژن کے روشن مستقبل کا تعین کرے گا ۔ …