پنجاب ریونیو اتھارٹی نے9ماہ میں 80ارب روپے ٹیکس اکٹھا کرکے ریکارڈ قائم کردیا

لاہور(میڈیا92نیوز رپورٹ)پنجاب ریونیو اتھارٹی نے9ماہ میں 80ارب روپے ٹیکس اکٹھا کرکے ریکارڈ قائم کردیا۔ سندھ ریونیو بورڈ سے17 ارب روپے زائد ریونیو اکٹھا کرنے میں پی آر اے نے دیگر صوبوں کو پیچھے چھوڑ دیا ہے۔ ذرائع کے مطابق پی آر اے نے گزشتہ سال مارچ کے مہینے میں6ارب 70کروڑ جبکہ روا ں سال مارچ میں 10ارب40کروڑ کا ریونیو اکٹھا کیا ہے،مارچ2017میں ٹیلی کام سیکٹر سے1.56ارب روپے ٹیکس وصول کیا گیا تھا جبکہ رواں سال مارچ کے مہینے میں ٹیلی کام سیکٹر سے3ارب روپے ٹیکس لیا گیا، اسی طرح گزشتہ سال مارچ میں ود ہولڈنگ ٹیکس کی مد میں120کروڑ روپے جبکہ روا ںبرس مارچ میں239کروڑ ریونیو اکٹھا کیا گیا ہےخ اسی طرح مارچ2017میں ٹرانسپورٹیشن سیکٹر سے127ملین روپے ٹیکس وصول کیا جبکہ رواں برس مارچ کے مہینے میں اسی سیکٹر سے588ملین روپے ٹیکس اکٹھا کیا گیا۔ ذرائع کے مطابق پی آر اے کے رجسٹرڈ ٹیکس گزاروں کی تعداد47000سے تجاوز کرگئی ہے۔ گزشتہ9ماہ کے دوران پی آر اے کے پاس11ہزار سے زائد افراد نے ٹیکس رجسٹریشن کروائی۔ رواں مالی سال2017-18میں پنجاب ریونیو اتھارٹی کےلئے130ارب روپے کا ریونیو ٹارگٹ رکھا گیا ہے جس میں سے80ارب روپے کا ٹیکس وصول کرلیا ہے، جوکہ ایک ریکارڈ ہے۔گزشتہ مالی سال2016-17میں پنجاب ریونیو اتھارٹی کا ریونیو ہدف85ارب روپے تھا۔ اس حوالے سے پنجاب ریونیو اتھارٹی کے چیئرمین ڈاکٹر راحیل صدیقی نے نمائندہ میڈیا92نیوزسے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ پی آر اے مسائل اور چیلنجز کے باوجود اپنا ٹارگٹ پورا کرےگی۔ہم نے 80ارب روپے کا ریونیو اکٹھا کرلیا ہے۔ انہوںنے کہا کہ ہم وزیراعلیٰ شہبازشریف کے ویژن کے مطابق پی آر اے کو مثالی ٹیکس کو لیکشن ادارہ بنانے کےلئے کوشاں ہیں۔

یہ بھی پڑھیں

اسلام آباد ہائیکورٹ نے نگران حکومت کو ایف بی آر کی ری اسٹرکچرنگ سے روک دیا

اسلام آباد ہائیکورٹ نے نگران حکومت کو ایف بی آر کی تنظیم نو سے روکتے …